- جمعه
December 14, 2018

انسانی حقوق کی ویب سائٹ حقیقت

فائربندی کے دوران افغان سیکورٹی فورس کو چوکس رہنے کی ہدایات



فائربندی کے دوران افغان سیکورٹی فورس کو چوکس رہنے کی ہدایات

افغانستان میں طالبان اور حکومت کے مابین فائر بندی کے آغاز کے ساتھ ہی افغان صدر محمد اشرف غنی نے سیکورٹی فورس کو مکمل طور پر چوکس رہنے کی ہدایات جاری کی ہیں۔۔


کابل سے ہمارے نمائندے کی رپورٹ کے مطابق افغان صدر کے پریس دفتر نے منگل کے روز ایک بیان میں اعلان کیا ہے کہ صدر محمد اشرف غنی نے صوبے قندھار کے اپنے دورے میں سیکورٹی کمانڈروں کو فائر بندی کے دوران پوری طرح سے الرٹ رہنے کی ہدایات جاری کی ہیں افغانستان کی حکومت نے طالبان سمیت مختلف حکومت مخالف گروہوں کے ساتھ فائربندی کا اعلان کیا ہے. تاہم کہا ہے کہ فائربندی کے اعلان میں داعش اور القاعدہ سمیت کوئی بھی دہشت گرد گروہ شامل نہیں ہے۔طالبان نے بھی اس فائربندی کا خیرمقدم کیا ہے جبکہ حکومت اور طالبان کے اس اقدام پر افغان حکام اور اراکین پارلیمنٹ نے اپنی حمایت کا اعلان کیا ہے۔واضح رہے کہ طالبان نے چند روز قبل  عید الفطر کے موقع پر فائربندی کا اعلان کیا تھا تاہم کہا تھا فائربندی میں غیر ملکی فوجیں شامل نہیں ہوں گی بلکہ ان کے خلاف حملے بدستور جاری رہیں گے - افغان حکومت نے طالبان کے اعلان کا خیر مقدم کرتے ہوئے جوابی طور پر فائربندی کا اعلان کیا تھا

ٹیگ

طالبان،سیکورٹی فورس،قندھار،،افغانستان

اپنے نوٹ بھیجیں

آپ کے نوٹ

آپ کا نوٹ

free website counter